[pakistan] - ’دیوداسی‘ نظام کے خلاف راجا موہن رائے کی طرز پر تحریک چلانا چاہتا ہوں، ڈاکٹر جاں نثار معین

  |   Pakistan

یادش بخیر۔۔۔! جب ہم نے ’ایم اے‘ کے بعد مزید تحقیقی مدارج چڑھنا چاہے تھے، تو ’ایم فل‘ کی پہلی ہی کلاس میں ایک محترم استاد نے فرمایا تھا کہ اگر تدریس میں آنا چاہتے ہیں،تب ہی ’یہ‘ مزید تعلیم ’مفید‘ ثابت ہوگی، لیکن اگر یافت کا ذریعہ دیگر شعبے ہیں، تو ’ایم اے، اِبلاغ عامہ‘ کی ڈگری ہی کو کافی جانیں۔۔۔!

زیر نظر انٹرویو کرتے ہوئے ہمیں یہ بات شدت سے یاد آئی، کیوں کہ ہماری اس مرتبہ کی ’شخصیت‘ تحقیق کی اِس پیشہ ورانہ ’کھپت‘ سے پوری طرح بالا ہے۔۔۔ شاید یہ علمی تحقیق کی کسی ’’پیشہ ورانہ لالچ‘‘ سے ماورا ہونے کا نتیجہ ہی ہے کہ انہوں نے دو علاحدہ علاحدہ زمروں میں ’پی ایچ ڈی‘ کر لیں۔۔۔ انہیں ڈاکٹر جاں نثار معین کہتے ہیں۔ باقی ہم نے کیوں، کیا اور کیسے کے بہت سے جواب آیندہ سطروں میں دینے کی کوشش کی ہے۔ ایک مرتبہ پھر یہ انٹرویو ہندوستان سے کیا گیا ہے، ہم چاہتے ہیں کہ ’مواصلاتی‘ انٹرویو کی اپنی رِیت کو زیادہ سے زیادہ نبھایا جا سکے۔...

فوٹو - http://v.duta.us/jkY32gAA

یہاں پڑھیں مکمل خبر http://v.duta.us/YkaVxQAA

📲 Get Pakistan News on Whatsapp 💬